وفاقی کابینہ کی منظور ی کے بعد تحریک لبیک کالعدم قرار

اسلام آباد: وفاقی کابینہ نے تحریکِ لبیک پر پابندی کی منظوری دے دی ہے۔انسدادِ دہشت گردی ایکٹ کے تحت تحریکِ لبیک پر پابندی کی منظوری دی گئی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ نے تحریک لبیک پاکستان پر پابندی کی سمری منظورکی ہے جبکہ ذرائع کا کہنا ہے کہ وفاقی کابینہ سے منظوری سرکولیشن سمری کے ذریعے لی گئی، اور پابندی کی منظوری انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت دی گئی ہے۔

سمری کے مطابق کہ تحریک لبیک کی پُرتشدد کارروائیوں سے 2 پولیس اہلکار شہید اور 580 زخمی ہوئے، قانون نافذ کرنے والے اداروں کی 30 گاڑیوں کو نقصان پہنچایا گیا، تحریک لبیک کے 2063 کارکن گرفتار اور 115 ایف آئی آردرج کی گئیں۔
ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ سمری کی منظوری کے بعد تحریکِ لبیک پاکستان پر پابندی کے ڈیکلیئریشن پر کام شروع کر دیا گیا ہے۔وفاقی حکومت پابندی کا ڈیکلیئریشن سپریم کورٹ پیش کرے گی۔جبکہ سپریم کورٹ کے فیصلے پر الیکشن کمیشن تحریکِ لبیک پاکستان کو ڈی نوٹیفائی کرے گا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید نے پریس کانفرنس میں اعلان کیا تھا کہ حکومت نے تحریک لبیک پاکستان پر پابندی لگانے کا فیصلہ کیا ہے، اور اس پابندی کا فیصلہ انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت کیا گیا ہے، جب کہ اس کی سفارش پنجاب حکومت نے کی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں