باپ نے 11 سالہ بیٹی کی 40 سالہ شخص کیساتھ جبری شادی کروادی

لودھراں : لودھراں میں 11سالہ بچی کی 40سالہ شخص کے ساتھ جبری شادی کردی گئی ۔پولیس نے بچی کو بازیاب کروا کر ذمہ داران کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ۔

پولیس کے مطابق لودھراں کی تحصیل جلہ آرائیں میں عبدالشکور نامی شخص نے اپنی بیوی کی غیر موجودگی میں11 سالہ بیٹی کا نکاح 40 سالہ پہلوان خان سے کر دیا اور رخصتی بھی کر دی ۔بچی کی والدہ جب گھر واپس آئی تو اس نے پتہ چلنے پر پولیس کو اطلاع دی جس پر پولیس نے اگلے دن لڑکی کو بازیاب کر والیا۔ بچی کی والدہ اشرف مائی کا کہنا ہے کہ 11 سالہ ثانیہ بی بی پانچویں کلاس کی طالبہ ہے، میری غیرموجودگی میں دماغی معذورشوہرنے بیٹی کوملزم پہلوان خان کےساتھ رخصت کرا دیا، ملزم نےرات بھرکمسن بیٹی کوزیادتی کانشانہ بنایا۔

پولیس کاکہنا ہے کہ بچی کےوالدنےکم عمربچی کاچالیس سالہ شخص سےجبری نکاح کردیاہے، پولیس نے کم عمری کی شادی کےایکٹ کےتحت نکاح خواں سمیت 7 افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے جبکہ ملزم فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ مذکورہ کم عمر لڑکی کا میڈیکل کروایا جا رہا ہے، جس کی رپورٹ آنے پر اس کے مطابق قانونی کارروائی کی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں