پیپلز پارٹی پی ڈی ایم کا حصہ نہیں ہے: مریم نواز

لاہور: مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی اب پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ(پی ڈی ایم) کا حصہ نہیں ہے، میرا نہیں خیال کہ پیپلزپارٹی کے معاملے پر اب بات کرنی چاہیے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ پی ڈی ایم میں کوئی اختلاف نہیں، سب کا ایک ہی نظریہ ہے، اس میں شامل جماعتوں کا وہی موقف ہے جو نواز شریف کا ہے۔

نون لیگ کی نائب صدر نے کہا کہ جج شوکت عزیز صدیقی کو سچ بولنے کی سزا نہ دی جائے،آج جسٹس شوکت عزیز ہیں تو کل کوئی بھی جج سوچ بولنا چاہے گا تو کٹہرے میں کھڑا ہوگا۔انہوں نے کہاکہ ججوں کو پریشر نہ کیا جائے اور سچ بولنے کی اجازت دیں، ججوں کے کیریئر پر اس طرح دھبہ لگتا ہے۔

مریم نواز نے کہاکہ مسلم لیگ نون مہنگائی کے تمام اعداد و شمار عوام کے سامنے لائے گی،نون لیگ بجٹ سے متعلق مشاورت کررہی ہے،ہم اپنی بجٹ حکمت عملی جلد سامنے لائیں گے۔انہوں نے کہاکہ استعفوں کا فائدہ تب ہوتا جب تمام جماعتیں استعفیٰ دیتیں، کچھ جماعتوں کی جانب سے استعفیٰ دینے سے نقصان ہوتا،حکومت وقت کی نااہلی، نالائقی ہم سب کے سامنے ہے،آخر کب تک کارکردگی کے بغیر حکومت کام کرتی رہے گی۔

گھوٹکی ٹرین حادثے پر بات کرتے ہوئے مریم نواز نے کہاکہ اس حکومت میں جتنے بھی ٹرین حادثے ہوئے نالائقی کی وجہ سے ہوئے،موجودہ حکومت ٹرین حادثات کی ذمہ داری بھی نہیں لے رہی۔ مریم نواز نے کہا کہ نواز شریف نے سات آٹھ سال کے پراجیکٹس کو دو سال میں ختم کیا، نوازشریف نے اقدامات کیے اور لوڈ شیڈنگ زیرو ہوئی ، نالائقی کی وجہ سے موجودہ حکومت نے بائیس بائیس گھنٹے تک لوڈ شیڈنگ پہنچا دی ۔انہوں نے کہاکہ موجودہ حکومت کی ترجیحات میں صرف نواز شریف ہے۔

وزیرصحت پنجاب نے کورونا ویکسین کی قلت کی خبریں بے بنیاد قرار دے دیں۔۔ ڈاکٹر یاسمین راشد کہتی ہیں کسی ضلع میں ویکسین کی قلت نہیں ۔۔تمام اضلاع میں کوٹے کے مطابق وافر ویکسین کی فراہمی جاری ہے۔۔ویکسی نیشن سینٹرزکی تعدادبڑھانے کے ساتھ ایک سو اٹھانوے موبائل ویکسی نیشن کیمپ بھی قائم کیے گئے ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں