طالب علم کو پاس کرنے کا جھانسہ دے کر ہوس کا نشانہ بنایا: مفتی عزیز کا اعتراف

لاہور: مدرسے میں طالب علم کے ساتھ مبینہ زیادتی کیس کے مرکزی ملزم مفتی عزیز الرحمان نے دوران تفتیش اعتراف جرم کرلیا، ملز م نے انکشاف کیا کہ لطالبعلم صابر کو پاس کرنے کا جھانسہ دیکراپنی ہوس کا نشانہ بنایا۔

تفصیلات کے مطابق ملزم عزیز الرحمان نے تفتیش میں انکشاف کیا کہ وہ ویڈیو میری ہی ہے جو طالبعلم صابر شاہ نے چھپ کر بنائی اور میں نے صابر کو پاس کرنے کا جھانسہ دے کر ہوس کا نشانہ بنایا ۔ ملزم عزیز الرحمان نے کہا کہ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد خوف کاشکار ہوگیا تھا۔ بیٹوں نے صابرشاہ کو دھمکایا اور اسے کسی سے بات کرنے سے روکا مگر صابر شاہ نے منع کرنے کے باوجود ویڈیو وائرل کردی ۔

پولیس تفتیش میں ملزم عزیزالرحمان نے انکشاف کیا کہ مدرسے کے متنظمین اور مہتمم ویڈیو کے بعد مدرسہ چھوڑنے کا کہہ چکے تھے اور میں مدرسہ چھوڑنا نہیں چاہتا تھا اس کے لیے ویڈیو بیان جاری کیا ۔ ملزم عزیزالرحمان نے تفتیش میں انکشاف کیا کہ مقدمہ درج ہونے کے بعد ٹاؤن شپ ، شیخوپورہ اور فیصل آباد میں شاگردوں کے پاس ٹھہرتا رہا ۔

ملزم عزیز الرحمان نے مزید بتایا کہ میری اور بیٹو ں کی فون لوکیشن ٹریس ہوئی اور جب میں میانوالی میں چھپا ہوتھا تو پولیس نے گرفتار کرلیا ۔ میں بھٹک گیا تھا اور اپنے کیے پر بہت شرمندہ ہوں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں