کورونا کا نیا ویرینٹ پاکستان میں پھیلنے کا خدشہ

اسلام آباد : این سی او سی کے سربراہ اسد عمر نے بیان جاری کرتے ہوئے کہاہے کہ کورونا وائرس کا نیا ویرینٹ بہت خطرناک ہے ، یہ پوری دنیا میں پھیل رہاہے اور پاکستان میں بھی آ سکتا ہے ، اس لیے ویکسی نیشن کا عمل مزید تیز کرنے کا فیصلہ کیا گیاہے ۔

پریس کانفرنس کرتے ہوئے اسدعمرکا کہناتھا کہ این سی او سی میں تمام فیصلے مستقبل کو مد نظر رکھ کر کیئے جاتے ہیں ، کورونا وائرس کا نیاویرینٹ ” اومی کرون “ انتہائی خطرناک ہے لیکن ویکسی نیشن اس کے خلاف موثر ہو گی ، پانچ کروڑ پاکستانیوں کو ویکسین کی دونوں ڈوزلگ چکی ہیں جبکہ تین کروڑ شہریوں کو سنگل ڈوز لگائی جا چکی ہے ۔

اسد عمر نے کہا کہ ہمارے پاس دو سے تین ہفتے ہیں جس میں زیادہ سے زیادہ ویکسی نیشن کرکے نئی قسم کے وائرس کے پھیلاؤ کے خطرے کو ختم کرنا ہے ۔انہوں نے کہا کہ آباد ی کا وہ حصہ جنہیں کورونا سے زیادہ خطرہ ہے ، ان کیلئے ویکسی نیشن کا دوسرا پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیاہے جس پر مشاورت کا عمل کل تک مکمل ہو جائے گا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں