سوڈانی وزیراعظم عبداللہ حمدوک کا مستعفی ہونے کا اعلان

خرطوم:فوج کے ساتھ متنازع سیاسی معاہدے پر دستخط کرنے کے چند ہفتوں بعد ہی سوڈان کے وزیراعظم عبداللہ حمدوک نے مستعفی ہونے کا اعلان کردیا ہے۔
غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق عبدااللہ حمدوک نے ایک ٹیلی ویژن خطاب میں اپنے استعفے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ سوڈان کو جمہوریت کی طرف منتقل کرنے کیلئے ایک نئے معاہدے کی ضرورت ہے ۔
انہوں نے مزید کہا کہ انہوں نے ملک کو تباہی سے روکنے کی پوری کوشش کی تھی، لیکن اتفاق رائے تک پہنچنے کے لیے جو کچھ بھی کیا گیا ویسا نہیں ہوا۔
سوڈانی وزیراعظم نے اپنے خطاب میں کہا کہ میں وزیر اعظم کے طور پر اپنے مستعفی ہونے کا اعلان کرتا ہوں اور میں نے اس عظیم ملک کے کسی دوسرے مرد یا عورت کو موقع دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔
خیال رہے کہ سوڈانی فوج نے اکتوبر میں اقتدار پر قبضہ کرتے ہوئے عبد اللہ حمدوک کو گھر میں نظر بند کر دیا تھا لیکن نومبر میں اقتدار کی تقسیم کے معاہدے پر دستخط کرنے کے بعد انہیں بحال کر دیا گیا تھا۔
تاہم مظاہرین نے مکمل طور پر سویلین سیاسی حکمرانی کا مطالبہ کرتے ہوئے اس معاہدے کو مسترد کر دیا۔
دوسری جانب گزشتہ روز فوجی حکمرانی کے خلاف مظاہروں کے دوران سکیورٹی فورسز نے 2 افراد کو ہلاک کر دیا جبکہ کہ 25 اکتوبر 2021 کو ہونے والی فوجی بغاوت کے بعد سے مظاہروں میں کم از کم 56 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں